اسلام آباد، 07 اپریل(اے پی پی): ملک میں کرونا وبا کے پیش نظر اشیاء ضرورت کی خریداری میں بے پناہ اضافہ دیکھنے میں آیا  ہے ،اس دوران لوگوں کی پورے مہینے کے لیے اشیاء ضرورت کی دھڑا دھڑ خریداری سے مارکیٹ میں سٹاک کی فراہمی میں شدید کمی دیکھنے میں آئی مگر بہت جلد اس صورتحال پر قابو پا لیا گیا ہے۔وزیراعظم عمران خان نے یوٹیلیٹی اسٹورز کے لیے7 ارب روپے کا پیکیج منظور کرلیا جس کے تحت ملک بھر کے یوٹیلیٹی اسٹورز پر اپریل کہ پہلے ہفتے سے چینی، دالوں، چاول اور گھی سمیت دیگر اشیا ضروریہ پر7 روپے سے 40 روپے تک کی سبسڈی دی جائے گی۔

وزیر اعظم پیکیج کے تحت 1000 اشیاء سے زائد کی قیمتوں میں کمی کی گئی ہے، پیکج کے تحت عوام خریداری میں مصروف ہیں اور بغیر کسی دقت اور پریشانی کے سستی اور معیاری اشیاءسے مستفید ہو رہے ہیں ۔

وزیر اعظم ریلیف پیکج کی وجہ سے ملک بھر کے تمام یوٹیلیٹی سٹورز پرخریداروں کا رش لگا ہوا ہے جسکی وجہ سے یوٹیلیٹی سٹورز کی سیلز میں ریکارڈ بہتری دیکھنے میں آئی ہے۔ملک بھر کے تمام سٹورز پر ہر چیز وافر مقدار میں دستیاب ہے اور مشکل کی اس گھڑی میں یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کی انتظامیہ اور ملازمین عوام کی سہولت کیلئے ان کی دہلیز پر سستی اور معیاری اشیاء خوردونوش فراہم کر رہے ہیں۔ یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن کی بہترین کارکردگی کی بنا پر پورے ملک میں اشیاء خوردونوش کی قیمتوں کو کنٹرول کرنے میں مددگار ثابت ہوا بالخصوص آٹے اور چینی کے بحران کو کنٹرول کرنے میں یوٹیلٹی سٹورز کا کردار بہت اہم ہے۔

وفاقی حکومت نے کسی بھی سیاسی وابستگی سے بالا تر ہوکر غریب عوام کی مشکلات کو کم کرنے کیلئے یہ پیکج دیا ،جو کامیابی سے چل رہا ہے اور اس میں مزید بہتری لانے کیلئے حکومت نے مزید فنڈز بھی منظور کر لئے تاکہ ملک بھر کے غریب عوام کی مشکلات کا ازالہ کیا جاسکے۔

یوٹیلیٹی اسٹور کارپوریشن نے مارچ تک کے لیے5 ارب کی خریداری مکمل کر لی اور، پاسکو سے 2 لاکھ ٹن گندم سستے نرخوں پر حاصل کر لی گئی ہے اور مستقبل قریب میں ریلیف پیکیج کے تحت 50ملین غریب اوربے سہارا خاندانوں کو راشن کارڈ دیے جائیں گے۔  عام صارف کی سہولت، مستحق اورنادار طبقات کیلئےشہریوں کے تحفظ کو یقینی بنانے کے لیے وزیراعظم نے یوٹیلیٹی اسٹور کارپوریشن کے ذریعے عوام کو ریلیف دینے کے لیے پیکیج کا اعلان کیا ہے۔

ایم ڈی یوٹیلیٹی اسٹور کارپوریشن کے مطابق یوٹیلیٹی اسٹورز پر آٹا 808 سے 850 روپے فی 20 کلو تھیلا، چینی68 روپے فی کلو ،گھی اور آئل میں30 سے40 روپے فی کلو، دالیں اور چاول پر 20 سے 31 روپے تک کم قیمت پر دستیاب ہونگے۔

یوٹیلیٹی سٹورز کارپوریشن پر وزیراعظم پیکیج کے تحت سیلز 8جنوری سے 30جنوری تک 4ارب 56کروڑروپے سے زائد رہی۔

یوٹیلیٹی سٹورکارپوریشن کے جاری اعداد و شمار کے مطابق اسلام آباد میں 87کروڑ57لاکھ،کراچی میں 42کروڑ64لاکھ،لاہور میں 60کروڑ30لاکھ،ملتان میں 51کروڑ17لاکھ،ایبٹ آ باد میں 51کروڑ سے زائد،فیصل آ باد میں 46کروڑ34لاکھ ،پشاور میں 48کروڑسے زائد،کوئٹہ میں 11کروڑ39لاکھ اور سکھر میں 18کروڑ98لاکھ روپے سمیت رہی۔

یوٹیلیٹی سٹور میں دال چنا کی قیمت 167روپے فی کلو سے کم ہوکر 160روپے فی کلو، دال مسور کی قیمت 135سے کم ہوکر 130روپے فی کلو ہو گئی ہے جبکہ ھانڈی گھی اور حفیظ گھی کی قیمت 200روپے فی کلو سے کم ہوکر 170روپے فی کلو کر دی گئی ہے۔

ترجمان کے مطابق یوٹیلیٹی سٹورز کارپوریشن کو وفاقی حکومت بھی بہت ترجیح دے رہی ہے اور اس وقت وزیر اعظم خود سارے پیکج کو مانیٹر کر رہے ہیں وزیر اعظم کی خواہش ہے کہ عوام کو زیادہ سے زیادہ اور فوری ریلیف فراہم کیا جائے جس کیلئے یوٹیلیٹی سٹورز کارپوریشن غریب، نادار اور بیواوں کیلئے راشن کارڈ پر بھی کام کر رہی ہے اور بہت جلد اسکا اجراء کیا جا ئیگا اسکے علاوہ وفاقی حکومت کی طرف سے بے روزگار نوجوانوں کیلئے یوٹیلیٹی روزگار سکیم کا بھی جلد اجراء ہونے جا رہا ہے اس سکیم کے تحت پہلے مرحلے میں دو ہزار فرنچائز کھولے جائیں گی۔

 یوٹیلٹی سٹورز کارپوریشن بہت جلد وفاقی حکومت کے احکامات کے مطابق رمضان ریلیف پیکج کا آغاز کرے گا جس کی وجہ سے19بنیادی اشیاءخوردونوش کی قیمتوں میں کمی کی جائی گی۔

اے پی پی /سحر/حامد