اسلام آباد،08اکتوبر(اے پی پی):کسی بھی معاشرے کی ترقی کے لئے تعلیم لازمی ہے اور ہماری ملکی آبادی کا نصف حصہ عورتوں پر مشتمل ہے ۔تعلیم نسواں پر توجہ مرکوز کئےبنا ملک میں معاشی واقتصادی ترقی نہیں کی جاسکتی ۔ماہرین تعلیم ڈاکٹر عبیداللہ نے اے پی پی سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ایک عورت کی تعلیم پورے خاندان کی تعلیم ہے اس کو صرف روزگار سے جوڑنا درست نہیں ۔ایک تعلیم یافتہ ماں ہی اولاد کی بہترین تربیت کر کے معاشرے کا امن کا گہواری بنا سکتی ہے ۔

سماجی کارکن ملیحہ حسین نے کہا کہ لڑکیوں کی تعلیم کے لئے بہت مسائل ہیں جس میں لڑکیوں کے لئے سکولوں کا کم ہونا ۔گھر سے دور ہونا ،ٹرانسپوٹیشین،سیکیورٹی اور نصاب میں تبدیلی سمیت کئی مشکلات ہیں جن کے حل کے لئے حکومت کی ذمے داری کے ساتھ ساتھ سول سوسائٹی کو بھی اپنا کردار ادا کرنا چاہیے۔

وی این ایس،اسلام آباد