چترال ، 08 مارچ (اے  پی پی ):وزیر اعلیٰ خیبر پختونخواہ کے معاون خصوصی برائے اقلیتی امور وزیر زادہ کیلاش  نے کہا ہے کہ  حکومت کا مشن ہے کہ جنگلات کی کمی کو پورا کیا جائے، سابقہ حکومتوں نے  جنگلات کی ترقی اور تحفظ  پر کوئی توجہ نہیں دی یہی وجہ ہے کہ ہمارے ملک میں جنگلات کی شدید کمی ہے  لیکن  اب  وزیر اعظم  عمران خان کے   ویژن کے مطابق صوبائی حکومت دس ارب پودے لگاکر جنگلات کی کمی کو پورا کرے گی۔

ان خیالات کا اظہار معاون خصوصی برائے اقلیتی امور نے  گونمنٹ ڈگری کالج میں پودا لگاکر شجر کاری مہم کے آغاز  کے موقع  پر گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ سابقہ حکمرانوں نے صرف اپنی تجوریاں بھری ہیں اور ملک و قوم کیلئے کچھ نہیں کیا ہے  یہی وجہ ہے  ہمارے ملک میں جنگلات کی شدید کمی ہے اور موسمیاتی تبدیلی کی وجہ بھی  ڈی فارسیٹیشن یعنی جنگلات کی بے دریغ کٹائی ہے۔

 انہوں نے ہندوستان کے وزیرا عظم نریندر مودی پر شدید تنقید کرتے ہوئے کہا کہ  پاکستان میں اقلیتوں کو اتنے ہی  حقوق حاصل ہیں  جتنے   اکثریت کو ہیں، انہوں نے اپنی مثال دیتے ہوئے کہا کہ چترال سے حکمران پارٹی کا ایک ایم پی اے   یا ایم این اے بھی نہیں ہے مگر پھر بھی وزیر اعظم   عمران خان  کے وعدے کے مطابق مجھے  صوبائی حکومت میں مخصوص نشست پر رکن صوبائی اسمبلی چن لیا گیا اور بعد میں وزیر اعلی  خیبر پختونخوا کے   اقلیتی امور پر معاون خصوصی کا قلمدان بھی سپرد کیا گیا جو صوبائی وزیر کے برابر ہے۔

وزیر زادہ  نے  کہا کہ  چترال میں مختلف  منصوبوں کیلئے کروڑوں روپے کا فنڈ جاری ہونے والا ہے اور لوگ بہت جلد حقیقی تبدیلی دیکھیں گے۔ انہوں نے ڈگری کالج کا بھی دورہ کیا اور پرنسپل پروفیسر ممتاز حسین کو یقین دہانی کرائی کہ وہ کالج کے تعمیر و ترقی میں ان کے ساتھ ہر ممکن تعاون کریں گے۔

انہوں نے کالج کے طلباء میں بھی مفت پودے تقسیم کیے اور  اس بات  پر زور دیا کہ وہ ان پودوں کو ضرور اپنے گھروں، کھیتوں اور زمین میں لگاکر جنگلات بڑھانے میں حکومت کا ساتھ  دیں ۔ اس موقع پر سب ڈویژنل فارسٹ آفیسر عمیر نواز اور محکمہ جنگلات کے افسران اور عملہ بھی موجود تھا۔

وی این ایس ، چترال

Download Video