ریاض (سعودی عرب)، 03 دسمبر (اے پی پی ):سعودی عرب میں سعودی میڈیا فورم کی جانب سے میڈیا کانفرنس کا انعقاد کیا گیا جس میں عرب ممالک سمیت پاکستان اور دیگر ملکوں کے چودہ سو کے قریب صحافیوں نے شرکت کی اور دورے حاضر میں انفارمیشن ٹیکنالوجی کو بہتر انداز کے ساتھ عمل میں لانے کے حوالے سے مقررین نے خطاب کیا ۔

کانفرنس میں عرب دنیا کے علاوہ دیگر ممالک کے اینکرز،  کالم نویس،  رپورٹرز اور میڈیا ہاوسز کے نمائندگان نے شرکت کی۔ دو روز جاری رہنے والی کانفرنس میں ایسٹ اور ویسٹ میں میڈیا کے کردار کے جائزہ لینے کے علاوہ میڈیا کے ذریعے درست خبر نگاری کے ذریعے دنیا بھر کے تعلقات میں توازن قائم کرنے اور باہمی طور پر ایک دوسرے کے ممالک کے کلچر کو فروغ دینے پر زور دیا گیا۔

سعودی عرب  میں پاکستانی سفیر راجہ علی اعجاز نے میڈیا کانفرنس کو خوش آئند  قرار دیا اور کہا کہ انفارمیشن ٹیکنالوجی میں جدت کے باعث دنیا کا ہر شخص باخبر رہنا چاہتا ہے اس لئے ضروری ہے کہ خبر کو بہتر انداز کے ساتھ پیش کیا جائے۔

پاکستان سے آئے ہوئے صحافیوں نے بھی کانفرنس کو خوب سراہا اور کہا کہ اس سے جہاں عرب دنیا کی صحافتی اقدار کو قریب سے سمجھنے کا موقعہ ملا وہیں پر سعودی عرب میں پاکستانی میڈیا کے کردار کے حوالے سے بات چیت  بھی ہوئے ۔

 اسلاملک کمیونیکیشن سنٹر کے صدر فہیم بن الحامد نے کہا کہ سعودی عرب وژن 2030 کے تحت ملکی و غیر ملکی میڈیا کو نئی جدت کے ساتھ مملکت میں متعارف کروا رہا ہے جس سے انفارمیشن ٹیکنالوجی میں مزید بہتری آئے گی۔