اسلام آباد،8جون  (اے پی پی):وفاقی وزیر اطلاعات و نشریات چوہدری فواد حسین نے کہا ہے کہ کابینہ  اجلاس میں فرسٹ وومن بینک کے چیئرمین کیلئے نجیب آگرہ کے نام کی ،نادرا  کے نئے  چئیر مین  کیلئے  طارق ملک   جبکہ انفارمیشن گروپ کے آفیسر مبشر حسن کو ایم ڈی اے پی پی تعینات کنے کی منظوری  دی  گئی ہے ۔

کابینہ  اجلاس کے  بعد     میڈیا کو  بریفنگ دیتے ہوئےانہوں نے  کہا ہے کہ   کابینہ  اجلاس میں فرسٹ وومن بینک کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے انڈیپنڈنٹ ڈائریکٹرز اور چیئرمین کی تعیناتی کی  منظوری دی گئی۔ نجیب آگرہ والا فرسٹ وومن بینک کے نئے چیئرمین ہوں گے، بشریٰ احسان، صبیحہ سلطان، اکبر علی، وجاہت رسول خان اور نغمانہ عالمگیر ہاشمی اس کے بورڈ میں شامل ہیں۔ اس بورڈ کے مکمل ہونے سے فرسٹ وومن بینک کی نجکاری کی ایک اہم شرط مکمل ہو گئی ہے جس کے بعد فرسٹ وومن بینک کی پرائیویٹائزیشن کا عمل تیزی سے آگے بڑھے گا۔

وفاقی  وزیر نے بتایا کہ انفارمیشن گروپ کے آفیسر مبشر حسن کو ایم ڈی اے پی پی تعینات کیا گیا ہے۔ نوید اسماعیل کو کے الیکٹرک میں بطور ممبر تعینات کرنے کی منظوری دی گئی۔ طارق ملک کو نادرا کا نیا چیئرمین مقرر کیا گیا ہے۔ طارق ملک نادرا کے بانی چیئرمینوں میں سے ہیں، وہ نادرا کو بہتر طریقے سے سمجھتے ہیں، وہ نادرا کے بانیوں میں شامل ہیں۔

انہوں نے  بتایا  کہ  عامر محی الدین بی ایس 20 سیکریٹریٹ گروپ کو چیف ایگزیکٹو آفیسر پاکستان ہائوسنگ فاﺅنڈیشن تعینات کیا گیا ہے۔  جسٹس (ر) ضیاءپرویز کو کمیشن آف انکوائری برائے لاپتہ افراد میں بطور ممبر تعینات کرنے کی منظوری دی گئی ہے۔ یہ نشست 27 دسمبر 2020ءکو جسٹس (ر) غوث محمد کے انتقال کے باعث خالی ہوئی تھی۔ عمر حبیب لودھی کو ڈائریکٹر یوٹیلٹی اسٹورز کارپوریشن آف پاکستان دوبارہ تعینات کرنے کی  منظوری دی گئی۔