اسلام آباد، 03 ستمبر (اے پی پی):  مقبوضہ کشمیر وادی میں کرفیو اور کشمیریوں کا بیرونی دنیا سے رابطہ  منقطع ہونے کو ایک مہینہ مکمل ہو رہا ہے لیکن مودی سرکار کی بربریت کو عالمی برادری بھی نہ روک سکی۔

05 اگست سے بھارتی جنتا پارٹی کی فرقہ پرست مودی سرکار نے جموں وکشمیر کی خصوصی حیثیت کو غیر قانونی طریقے سے ختم کر کے وادی میں کرفیو نافذ کر دیا تھا۔معصوم اور نہتے کشمیریوں پہ ظلم و جبر کی جہاں مثال نہیں ملتی وہیں مسلسل ایک ماہ کے کرفیو کی بھی نئی مثال   قائم  کی گئی ہے جس کی وجہ سے خوراک اور ادویات کی کمی سے کشمیریوں کو بلک بلک کے مرنے پہ مجبور کیا جا رہا ہے۔

وی این ایس، اسلام آباد