کوئٹہ،05اگست ( اے پی پی ): وزیر اعلیٰ   بلوچستان   کی  مشیر برائے  کوئٹہ ڈویلپمنٹ اتھارٹی بشرہ رند نے کہا ہے کہ 5اگست کو پورے بلوچستان میں یوم استحصال کشمیر بھرپور جوش و جذبے سے منایا جارہا ہے، ایک سال سے جبری طور پر نافذ کرفیو پر عالمی برداری اور اقوام متحدہ کی خاموشی سمجھ سے بالاتر ہے ،بھارت نے ظلم وستم کا بازار گرم کیا ہوا ہے کشمیری عوام پر تمام تر سہولیات زندگی ایک سال سے بند ھے اور کشمیری عوام علاج و معالجے سمیت تمام بنیادی سہولیات سے محروم ہے جس کی وجہ سے خوراک کی شدید قلت کا سامنا ہے اقوام متحدہ اور عالمی دنیا اس صورتحال کا سختی سے نوٹس لے ۔

 قومی خبر رساں   ایجنسی  “اے پی پی نیوز”سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ کشمیر ہماری شہ رگ ہے، پاکستان اور کشمیر ایک دوسرے کے لئے لازم و ملزوم ہے، بھارت کے ناپاک ارادوں کو ناکام بنانے کے لیے پوری پاکستان قوم متحد اور تیار ہے، اگر ہمارا دشمن سمجھتا ہے کہ اس کے اوچھے ہتھکنڈوں سے کشمیریوں کی آزادی کی حق خوددرایت کی آواز دبائی جاسکتی ہے تو یہ اس کی غلط فہمی ہے۔

صوبائی مشیر نے کہاکہ بھارت کے کالے قانون کی کوئی حیثیت نہیں اور اب پوری دنیا نے بھارت کا مکروہ چہرہ دیکھ لیا ہے ، انہوں نے کہا ہے کہ پاکستان کا بچہ بچہ کشمیر کے دفاع کے لیے اپنی جان کی قربانی دینے کے لیے تیار ہے بھارت ہماری امن کی خواہش کو کمزوری نہ سمجھے کشمیر پاکستان کی شہ رگ  ہے  انشاءاللہ کشمیر پاکستان بنے گا ۔

اے پی پی / محمد بلال اعوان /حامد