چترال ،13 مارچ(اے پی پی ):چترال کو ملک کے دیگر حصوں سے ملانے والا واحد  زمینی راستہ لواری سرنگ تو اسی فیصد بن گیا مگر اس  کی  رابطہ  سڑکوں  پر   اب بھی پینتیس  فیصد کام باقی ہے۔ سڑک پر کام بند ہوا ہے اور کھڈوں کی وجہ سے مسافروں کو نہایت مشکلات کا سامنا ہے۔ چترال کے سیاسی اور سماجی طبقہ وفاقی حکومت اور با لخصوص وزیر اعظم عمران خان  سے  پر زور مطالبہ کرتے ہیں کہ لواری سرنگ کے دونوں جانب سڑکوں کی تعمیر کیلئے فنڈ جاری کرے تاکہ لوگ آئے روز حادثات سے بچ سکیں  اور ملک کا  یہ حصہ  ترقی کر  سکے ۔

 دیکھتے ہیں گل حماد فاروقی کی یہ رپورٹ