چترال،05 نومبر ( اےپی پی):چترال کے مضافاتی علاقے سینگور شاہ میراندہ میں معذور شحص  زیرہ خان کے گھر میں اچانک آگ بھڑک اٹھی۔ دیکھتے ہی دیکھتے آگ نے پورے گھر کو لپیٹ میں لے لیا۔ مکمل گھر سامان سمیت جل کر خاکستر ہو گیا۔

چترال کے مضافاتی علاقے سینگور شاہ میراندیہہ میں معزور شحص کا گھر مکمل طور پر جل کر سامان سمیت خاکستر ہو گیا۔ متاثرہ شحص نے حکومت سے امداد کی پیل کی ہے۔  سینگور کے علاقے شاہ میراندیہہ میں معذور شحص زیرہ خان کے گھر میں اچانک آگ بھڑک اٹھی۔ آگ نے تھوڑی دیر میں پورا مکان لپیٹ میں  لے لیا اور 8 کمروں، باورچی خانہ، برآمدہ سمیت گھر میں لاکھوں روپے کا سامان بھی پل جھپلتے ہی جل کر خاکستر ہوگا۔  گاؤں کے رضاکاروں نے نہایت جانفشانی سے  آگ پر پانی ڈال کر بجھانے کی کوشش کی مگر آگ اتنے بڑے پیمانے پر لگی تھی کہ بجھنے کا نام ہی نہیں لیا۔

ریسکیو 1122 کو اطلاع دی گئی مگر ایک تو ریسکیو کا دفتر دور ہے دوسرا اس مکان تک راستہ نہیں پہنچتا یہی وجہ ہے کہ ریسکیو  عملہ کے آنے تک آگ  نے پورا مکان لپیٹ میں لیا تھا اور اس کے اندر پڑا ہوا سامان بھی جل گیا۔

متاثرہ معذور شحص زیرہ خان کا کہنا ہے کہ اس کے پانچ بچے ہیں جو بے روزگار ہیں اور اب اس میں اتنی ساکت نہیں ہے کہ اس تباہ شدہ مکان کو دوبارہ تعمیر کرے۔ انہوں نے صوبائی  اور وفاقی حکومت کے ساتھ  ساتھ قدرتی آفات پر کام کرنے والے  اداروں سے بھی اپیل کی ہے کہ اس کے ساتھ مالی طور پر مدد کی جائے تاکہ وہ سردیاں آنے سے پہلے اس مکان کو دوبارہ بنائے اور اپنے اہل حانہ کو سردی سے بچا سکے کیونکہ کسی اور کے گھر میں اس سرد موسم میں رہنا ناممکن ہے۔