چترال، 16 ستمبر ( اے پی پی ): بزکشی کا کھیل اگرچہ افغانستان کے علاقے نورستان کا کھیل ہے اور وادی کیلاش کے شیخانندہ کے مسلم کمیونٹی میں زیادہ مقبول ہے   مگر اب یہ کھیل وادی کیلاش کے علاوہ دیگر علاقوں میں بھی کھیلا جاتا ہے۔بروغل افغانستان کے علاقے واخان کے سرحد پر واقع ہے اور افغانستان کے لوگوں کا پسندیدہ کھیل بزکشی ہے۔

وادی بروغل میں بھی بزکشی کا نہایت دلچسپ کھیل منعقد  ہوا۔  بزکشی میں ایک بکرا ذبح کرکے اسے کھیل کے میدان میں رکھا جاتا ہے جس پر گھوڑوں پر سوار کھلاڑی جپٹ پڑتے ہیں اور اسے اٹھانے کی کوشش کرتے ہیں۔ جو کھلاڑی اسے اٹھانے میں کامیاب ہوا وہ بکرے کو اٹھاکر میدان کے دوسرے سرے تک دوڑ لگا تا ہے اور واپس اسی جگہ آتا ہے جہاں سے بکرا اٹھایا تھا مگر اس دوران دوسرے کھلاڑی اس سے بکرا چھینے کی کوشش کرتے ہیں اور اگر دوسرا کھلاڑی اپنے مشن میں کامیاب ہو تو وہ بکرے کو لیکر میدان کے دوسرے  سرے تک جاتا ہے اور واپس اسی جگہ آتا ہے۔

کھیل میں بروغل کے دریا کے آر پار دو دیہات کی ٹیموں نے حصہ لیا جس میں شیر خان نے شیر اعظم کو شکست دیکر ٹرافی اپنے نام کردی۔

آخر میں کامیاب کھلاڑیوں میں انعامات بھی تقسیم کئے گئے۔

اے پی پی/گل حماد فاروقی /قرۃالعین