چترال، 16 ستمبر (اے پی پی ): پولو بادشاہوں کا کھیل یا کھیلوں کا بادشاہ سمجھا جاتا ہے۔ جس کیلئے شاہی سواری یعنی گھوڑا لازم جز ہے۔ مگر چترال کے شاہی  مزاج لوگ جب شاہی سواری نہیں کر پاتے تو بادشاہوں کا یہ کھیل یعنی پولو  گدھے سے بھی کھیلتے ہیں۔

  گدھا پولو وادی بروغل کا خاص کھیل ہے جس میں کل بارہ کھلاڑی حصہ لیتے ہیں مگر چونکہ یہ فری سٹائل کھیل ہے  تو اس میں کھلاڑیوں  کی  تعداد کم و زیادہ بھی ہوسکتی ہے۔ گھوڑا پولو اور گدھا پولو میں فرق صرف اتنا ہے کہ گدھے کو ہانک کر بال کے پیچھے دوڑانا پڑتا ہے جبکہ گھوڑا  تربیت یافتہ ہونے کی وجہ سے  خود بال کے پاس پہنچ جاتا ہے اور کھلا ڑی آسانی سے بال کو آگے بڑھا کر گول کرنے کی کوشش کرتا ہے۔

امسال   بھی وادی بروغل میں گدھا پولو  کا انعقاد کیا گیا  جسے دیکھنےکے  لیے  مقامی افراد کے علاوہ یورپین یونین کے نمائندے ، پاکستان تحریک انصاف کے ضلعی صدر عبد الطیف، سپورٹس آفیسر فاروق اعظم، ایجوکیشن افیسر محمود غزنوی، اسسٹنٹ کمشنر اپر چترال اور غیر سرکاری اداروں کے نمائندے بھی موجود تھے  ۔

 اے پی پی / گل حماد فاروقی/نورین