اسلام آباد،26جولائی(اے پی پی ): تربیلاڈیم  نے  چوتھے توسیعی منصوبے  کے اہم ہدف  کو عبور کر تے ہوئے  نیشنل گرڈ کو ایک ہزار 410میگاواٹ بجلی مہیا کر دی۔تربیلا چوتھے توسیعی منصوبے سے بجلی کی یہ پیداوار پاور پلانٹ کے اعلیٰ معیار اور ڈیم میں پانی کی بلند سطح کے باعث حاصل ہوئی۔

اِس اہم کامیابی کے حصول پر چیئرمین واپڈا لیفٹیننٹ جنرل مزمل حسین (ریٹائرڈ) نے تربیلا چوتھے توسیعی منصوبے کی انتظامیہ خصوصاً انجینئرز کومبارکباد دی ہے۔

گزشتہ برس مکمل ہونے والے تربیلا کے چوتھے توسیعی منصوبے کو بین الاقوامی مالیاتی اداروں نے واپڈا کا فلیگ شپ منصوبہ قرار دیا ہے۔ فروری 2018ء میں پہلے یونٹ کی تکمیل پر اِس منصوبہ سے بجلی کی پیداوار کا آغاز ہوا جبکہ دوسرے اور تیسرے یونٹ  2018 ء کے وسط تک مرحلہ وار مکمل کئے گئے۔ اپنی تکمیل سے اب تک تربیلا چوتھا توسیعی منصوبہ نیشنل گرڈ کو 3ارب 14کروڑ یونٹ کم لاگت بجلی فراہم کر چکا ہے۔ اِس اہم منصوبہ سے ملک میں بجلی کی کمی دور کرنے میں مدد ملی ہے۔

تربیلا چوتھا توسیعی منصوبہ تربیلا ڈیم کی سرنگ نمبر 4پر تعمیر کیا گیا ہے۔ منصوبے کے تین پیداواری یونٹ ہیں جن میں سے ہر ایک کی پیداواری صلاحیت 470میگاواٹ ہے۔ یہ منصوبہ قومی نظام کوہر سال اوسطاً3ارب 84کروڑ  یونٹ بجلی فراہم کرے گا۔ منصوبے سے سالانہ آمدنی کا تخمینہ 30ارب روپے ہے۔ چوتھے توسیعی منصوبے کی تکمیل کے بعد تربیلا ہائیڈل پاور سٹیشن کی پیداواری صلاحیت3 ہزار 478 میگاواٹ سے بڑھ کر 4 ہزار 888میگاواٹ ہوگئی ہے۔

سورس : وی این ایس ، اسلام آباد