چترال، 28  اکتوبر  (اے پی پی): چیو پُل سے چترال ائیر پورٹ تک سڑک  کی پختگی  کا   کام  تیزی  سے   جاری  ہے ،سڑک  کی    تعمیر  کیلئے اسفالٹ  پلانٹ خصوصی    طور  پر  لگایا   گیا ہے ، جس  سے کرش، خاکہ اور تارکول  150 سنٹی  گریڈ درجہ حرارت تک اس پلانٹ میں گرم ہوکر مکس ہوتاہے ،جس سے   کام کے  معیار میں    بہتری  آتی ہے ۔

ضلعی زکوۃ کمیٹی   کے   چئیرمین اور     پاکستان   تحریک  انصاف  کے  سینئر   رہنماء محمد قاسم  نے کام کا  جائزہ لیا اور اس پر نہایت تسلی کا اظہار کیا۔ان کا کہنا ہے کہ بعض لوگ سستی شہرت کیلئے جھوٹا پروپیگنڈا کررہے ہیں عوام کو چاہئے کہ ایسے  لوگوں کے جھوٹے پروپیگنڈوں پر کان نہ دھریں  اور تسلی رکھیں کہ ہماری حکومت میں  ہم غیر معیاری کام کا تصور بھی نہیں کرسکتے ہیں۔

محمد نعیم بھی اسی سڑک سے روز گزرتا ہے ان کا کہنا ہے کہ اس سڑک کی پختگی  سے عوام کو گرد و غبار اور کھڈوں سے نجات ملے گا اور وہ نہایت سکون کے ساتھ اس پر سفر کرسکیں گے۔

حضرت علی کا تعلق دیر اپر سے ہے جو چترال میں کاروبار کرتا ہے ان کا کہنا ہے کہ پہلے اس سڑک کی حالت انتہائی خراب تھی اس پر گزرنے والے راہ گیروں کو گرد وغبار کے علاوہ کھڈوں پر گزرنا پڑتا تھا اب چونکہ اس پر کام شروع ہوا ہے تو اس سے عوام کو اس گرد وغبار سے نجات ملے گی اور چترال آنے والے سیاح بھی اس سے محظوظ ہوں گے۔

حاجی گلاب نے کہا کہ ابھی اس روڈ پر کام شرو ع ہوا ہے اور ہمیں امید پیدا ہوگئی کہ اب یہ سڑک پختہ ہوجائے گی۔ یہ سڑک چترال  کی خوبصورتی پر نہایت بد نما داغ تھا اب جب یہ تعمیر ہوگا تو اس سے نہ صرف مقامی لوگوں کو فائدہ ہوگا بلکہ یہاں آنے والے سیاحوں کو بھی  سفر کرنے میں آسانی ہوگی۔