ہری پور،06 مارچ(اے  پی پی ):وزیراعظم کی معاون خصوصی برائے تخفیف غربت وسماجی تحفظ ثانیہ نشترنے کہاہے کہ ایک ماہ کے دوران پندرہ اضلاع کے احساس نادرارجسٹریشن سنٹرزپرکفالت پروگرام کے تحت پونے دولاکھ افرادکورجسٹرڈکیاگیاہے، مارچ کے آخرتک مزید55اضلاع کی تمام تحصیلوں میں رجسٹریشن سنٹرزکاآغازکیاجارہاہے۔

وہ احساس نادرارجسٹریشن سنٹرہری پورآفس کے دورے اور بعدازاں میڈیا سے گفتگو کررہی تھیں۔ انہوں  نے  کہا کہ  ہماری کوشش ہے کہ رجسٹریشن کے عمل کوخواتین کے لیے مزیدآسان بنایاجائے، رجسٹریشن سنٹرزپررش کو کم کرنے کے لیے ٹوکن کاؤنٹرزلگائے جائیں گے جس سے رجسٹریشن کے لیے آنے والی خواتین کوپتہ چل سکے گاکہ اُنھوں نے رجسٹریشن کے لیے کب آناہے جبکہ رجسٹریشن ڈیسک کاؤنٹرزکی تعدادکودو سے بڑھاکرتین اور پانچ کردیاگیاہے جسکی تعدادمیں مزید بھی اضافہ کیا جائے گا۔

انہوں نے  کہا کہ ایس ایم ایس کے زریعے بھی اپوائنٹمنٹ دینے کے نظام کوشروع کیاجارہاہے ہماری کوشیش ہے کہ عوام کورجسٹریشن کے عمل میں تکلیف سے بچایا جاسکے جسکے لیے تمام وسائل بروئے کارلائے جارہے ہیں ۔

ڈاکٹر ثانیہ نشترنے کہاکہ خواتین ذیادہ سے ذیادہ کفالت پروگرام میں حصہ لے رہی ہیں ایک ماہ کے دوران بھی رجسٹریشن کے عمل میں بہتری آئی ہے ہماری کوشیش ہے کہ ذیادہ سے ذیادہ خواتین کورجسٹرکیاجا سکے اور اُنھیں جلد سے جلدوظیفہ جاری کیاجائے۔

اس مو قع پراحساس نادرارجسٹریشن سنٹرہری پورکے عملے نے اُنھیں رجسٹریشن کے مرحلہ وارعمل کے حوالے سے مکمل بریفنگ دی جبکہ معاون خصوصی نے رجسٹریشن کے لیے آنے والی خواتین سے درپیش مسائل کے متعلق بھی دریافت کیااوررجسٹریشن کے عمل کاجائزہ لیا۔

وزیراعظم کی معاون خصوصی نے بعدازاں احساس پروگرام کے تحت رقوم کی وصولی کے دوسنٹرزکابھی دورہ کیااوررقوم کی وصولی کے طریقہ کارکاجائزہ لیتے ہوئے وصولی کے لیے آنے والی خواتین سے بھی گفتگوکی۔

سورس:وی این ایس،ہری پور