مظفرگڑھ،23اپریل(اے پی پی) کرونا وائرس کے امکانی خطرات کے پیش نظر مظفرگڑھ میں بھی حفاظتی انتظامات کیے گئے، کرونا وائرس کے مریضوں کو علاج معالجے کی سہولیات کی فراہمی کے لئے آئسولیشن وارڈز بنانے کے ساتھ ساتھ طیب اردگان ہسپتال میں قرنطینہ سنٹر بھی بنا دیا گیا ہے ۔

کرونا وائرس کے متوقع امکانی خطرات کے پیش نظر ملک کے دیگر اضلاع کی طرح مظفرگڑھ میں بھی حکومتی سطح پر اقدامات کرتے ہوئے ضلعی صدر ہسپتال سمیت علی پور۔ جتوئی ۔کوٹ ادو اور چوک سرور شہید کے تحصیل ہیڈ کوارٹرز ہسپتالوں میں آئیسولیشن وارڈز قائم کر دیے گئے اسی طرح طیب اردگان ہسپتال میں خصوصی آئیسولیشن وارڈ اور قرنطینہ سنٹر بنا دیا گیا ،زائرین سمیت جنوبی پنجاب کے دیگر شہروں سے بھی کرونا وائرس سے متاثرہ افراد کو طیب اردگان ہسپتال کے قرنطینہ سنٹر منتقل کیا  جا رہا ہے، سماجی فاصلوں کو برقرار رکھنے کے لئے لاک ڈاؤن کا سلسلہ جاری ہے لاک ڈاؤن پر عملدرآمد کرانے کے لئے مقامی پولیس کے ہمراہ پاک فوج کا کردار بھی مثالی ہے ۔

ضلعی انتظامیہ کے مطابق ضلع بھر میں اب تک کرونا وائرس سے متاثرہ 314 مریض رپورٹ کیے گئے، ان میں سے 76 مریض قرنطینہ سنٹر میں موجود ہیں جن میں سے 74 مریضوں کی رپورٹس مثبت آئی ہیں جبکہ 138 مریضوں کو نیگٹو رپورٹس کی بنا پر ڈسچارج کر دیا گیا ہے ۔

اے پی پی/محمد کامران /نورین