اسلام آباد ، 11 جولائی (اے پی پی ): پاکستان سمیت دنیا بھر میں  آبادی میں اضافے کی وجہ سے پیدا ہونے والے مسائل کو اجاگر کرنے  اور  اس سے  متعلق   آگاہی فراہم  کے لیے  ہر سال 11جولائی کو  آبادی کا عالمی دن  منایا جا تا ہے۔

عالمی ماہرین کا کہنا ہے کہ ہرسال دنیا کی آبادی میں تیزی سے اضافہ ہورہا ہےلیکن  اس کے مقابلے میں وسائل کم ہورہے ہیں  جو ایک تشویشناک بات ہے۔ دنیا بھر کے بے شمار مسائل آبادی میں اضافے سے جڑے ہوئے ہیں جن میں غربت ، بے روزگار ی، خوراک کی فراہمی، علاج، رہائش، تعلیم کی سہولیات کی فراہمی، جرائم کی شرح میں اضافہ، معاشی اور معاشرتی عدم توازن، عدم اطمینان، رہائشی سہولیات کی کمی اور صاف پانی کی فراہمی جیسے اہم  مسائل  ہیں۔

 ماہرین کے مطابق اگراسی تناسب سے آبادی بڑھتی رہی تو آئندہ پچاس برسوں میں دنیا کی آبادی میں دوسے چار ارب کا اضافہ ہوجائے گا اور وسائل کی کمی ایک بڑا مسئلہ بن جائے گی۔

 پاکستان  بھی  ان ممالک  کی  فہرست  میں  نمایاں  ہے   جہاں   آبادی میں اضافے اور وسائل کی کمی کے باعث مسائل میں  اضافہ ہوا ہے ۔

آبادی کے  عالمی  دن کے موقع   پر حالات کا تقاضا ہے کہ ان مسائل پر قابو پانے کے لیے عوامی سطح پر آگاہی اور  اس مسئلے  سے متعلق  شعور اجاگر کیا جائے  تا کہ دنیا بھر کی آبادی کے بے ہنگم اضافے کے مسائل پر قابو پا کر   ترقی اور خوشحالی کی راہیں ہموار کی جا ئیں اور  آنے والی نسلوں  کو    بہترین   وسائل اوراچھی معیار زندگی میسر آ سکیں۔

سورس : وی این ایس ، اسلام آباد