وفاقی وزیر اطلاعات نے کہا کہ بدقسمتی سے ایک طویل عرصہ سے ریلوے کے نظام میں سرمایہ کاری نہیں ہوئی، 74 سال کے بعد ہم نے ایم ایل ون منصوبے کا آغاز کیا۔ انہوں نے کہا کہ آج رونما ہونے والا حادثہ افسوسناک ہے۔ وفاقی وزیر اطلاعات نے الیکشن کمیشن سے حکومتی وفد کی ملاقات کے حوالے سے بتایا کہ آج الیکشن کمیشن کے ساتھ حکومتی وفد کی دوسری ملاقات ہوئی۔ ملاقات کے دوران چار نکات پر تبادلہ خیال ہوا جن میں الیکٹورل ریفارمز بل، الیکٹرانک ووٹنگ مشین، بائیو میٹرک اور آئی ووٹنگ شامل ہیں۔ انہوں نے کہا کہ الیکٹورل ریفارمز بل گزشتہ سال اکتوبر میں قومی اسمبلی میں پیش کیا گیا، اس بل کے ذریعے ہم نے انتخابی عمل میں 49 ترامیم متعارف کروائیں، ہماری خواہش ہے کہ اپوزیشن بھی ہمارے ساتھ بیٹھے اور اپنا نکتہ نظر پیش کرے تاکہ ہم ایک ایسے انتخاب کی طرف بڑھ سکیں جس پر پاکستان میں سب لوگوں کو اعتماد ہو۔ انہوں نے کہا کہ الیکٹرانک ووٹنگ مشین انتخابی دھاندلی کے الزامات کا خاتمہ کرنے میں اہم کردار ادا کرے گی۔ زیادہ تر دھاندلی کے الزامات پولنگ ختم ہونے کے بعد نتیجہ کے اعلان تک لگتے ہیں۔